3

کیون تیری درد کو دن توحمت ویرانی۔




کیون تیری درد کو دن توحمت ویرانی-اردو شاعری












/درد شایری/پوسیہ محسن نقوی۔/

کیون تیری درد کو دن توہمت ویرانی دل۔
زلزلون مائی ایک بھرن شہر اجر جاں ہے۔

کیونکہ۔ ترے درد کو ریگالہ۔ بہتان۔ تباہ کر دیا۔ دل

زلزلے۔ جو۔ تم مکمل شہر اجڑ زبردست وہ ہیں

کیونکہ۔ تم درد۔ کو دینا تہمت ویرانی دل۔

جھگڑے میں ٹین پر کریں شہر ویران جاؤ آہ






اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں