2

واٹس ایپ اسٹیٹس کے لیے اردو میں بہترین شاعری۔

اردو میں واٹس ایپ اسٹیٹس پر بہترین مشہور نظمیں۔

اٹھو یہ منظر شب تاب دیکھنے کے لیے

کہ نیند شرط نہیں خواب دیکھنے کے لیے

utho yeh manzar shab taab dekhnay ke liye
ke neend shart nahi khawab dekhnay ke liye

ہائے وہ لوگ گئے چاند سے ملنے اور پھر

اپنے ہی ٹوٹے ہُوئے خواب اُٹھا کر لے آئے

haae woh log gaye chaand se milnay aur phir
apne hi tootay huay khawab uttha kar le aaye

ہم اس لیے تیری چاہ کرنے سے ڈر رہے ہیں

ہماری آنکھوں میں خواب بچپن سے مر رہے ہیں

hum is liye teri chaah karne se dar rahay hain
hamari aankhon mein khawab bachpan se mar rahay hain

اب جدائی کے سفر کو مرے آسان کرو

تم مجھے خواب میں آ کر نہ پریشان کرو

ab judai ke safar ko marey aasaan karo
tum mujhe khawab mein aa kar nah pareshan karo

کوٸ ملا ہی نہیں جس کو سونپتے محسن

ہم اپنے خواب کی خوشبو,خیال کا موسم

koi mila hi nahi jis ko sompty mohsin
hum –apne khawab ki khushbu, khayaal ka mausam

خواب کی طرح بکھر جانے کو جی چاہتا ہے

ایسی تنہائی کہ مر جانے کو جی چاہتا ہے

khawab ki terhan bikhar jane ko jee chahta hai
aisi tanhai ke mar jane ko jee chahta hai

اور تو کیا تھا بیچنے کے لئے

اپنی آنکھوں کے خواب بیچے ہیں

aur to kya tha baichnay ke liye
apni aankhon ke khawab baiche hain

کہانی لکھتے ہوئے داستاں سناتے ہوئے

وہ سو گیا ہے مجھے خواب سے جگاتے ہوئے


kahani likhte hue dastan sunaate hue
woh so gaya hai mujhe khawab se jagatay hue

عاشقی میں میرؔ جیسے خواب مت دیکھا کرو

باؤلے ہو جاؤ گے مہتاب مت دیکھا کرو

aashiqii mein meerؔ jaisay khawab mat dekha karo
baole ho jao ge mehtaab mat dekha karo

خواب ہی خواب کب تلک دیکھوں

کاش تجھ کو بھی اک جھلک دیکھوں

khawab hi khawab kab talak daikhon
kash tujh ko bhi ik jhalak daikhon

خواب ہوتے ہیں دیکھنے کے لیے

ان میں جا کر مگر رہا نہ کرو

khawab hotay hain dekhnay ke liye
un mein ja kar magar raha nah karo

خواب تیرے ہی رہیں گے ہمیشہ.؟

مجھے بھروسہ ہے اپنی آنکھوں پر!!

khawab tairay hi rahen ge hamesha ?
mujhe bharosa hai apni aankhon par! !

اک معمہ ہے سمجھنے کا نہ سمجھانے کا

زندگی کاہے کو ہے خواب ہے دیوانے کا

ik moamma hai samajhney ka nah samjhane ka
zindagi kaahe ko hai khawab hai deewany ka

کبھی جو خواب تھا وہ پا لیا ہے

مگر جو کھو گئی وہ چیز کیا تھی

kabhi jo khawab tha woh pa liya hai
magar jo kho gayi woh cheez kya thi



Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں